×

پاکپتن شریف میں بابا فرید گنج شکرؒ کے مزار پر جو شخص آئے اسکے ساتھ ایک کام نہ ہو تو سمجھیے وہ بہت بدقسمت ہے۔ ایک خصوصی تحریر

لاہور (ویب ڈیسک) 1947-48ء میں پاک پتن کی آبادی بہت کم تھی۔ اس کے دو حصے تھے۔ زیادہ لوگ اس ٹیلے پر آباد تھے جس کو ’اتاڑ‘ کہا جاتا تھا  اور یہ ایک وسیع سطح مرتفع تھی۔ یہاں بھی حضرت بدرالدین اسحاق کا مزار تھا جن کے عقد میں حضرت بابا فرید کی دو بیٹیاں […]