پائلٹ حسن صدیقی کون Who is pilot Hassan Siddiqui

پائلٹ حسن صدیقی کون ؟ Who is pilot Hassan Siddiqui

بشکریہ ثنااللہ احسان

پاکستانی پائلٹ حسن صدیقی

پائلٹ حسن صدیقی

بھارتی عزائم کو خاک میں ملانے والا نارتھ کراچی کا بہاری بابو محمد حسن محمود صدیقی!
بھارت کے مگ 21 طیارے مار گرانے والے ھیرو !
ملئےپاکستان ائر فورس کے شیردل پائلٹ اسکواڈرن لیڈر حسن محمود صدیقی سے!
کراچی کے ایک بہاری مہاجر گھرانے میں آنکھ کھولنے والے بہادر سپوت!

جی ہاں حسن محمود صدیقی راشد منہاس شہید کے شہر کراچی سے تعلق رکھتے ہیں- جنہوں نے بھارت کے مگ 21 طیارے جو پاکستان کی حدود میں آوارہ کتوں کی طرح گھس آئے تھے- حسن صدیقی کی للکار پر دم دبا کر چیاؤں چیاؤں کرتے بھاگے لیکن حسن صدیقی کا نشانہ اور ایمان دونوں بڑے پکے تھے- اس وقت حسن صدیقی علامہ اقبال کے شعر کی تفسیر بنے ہوئے تھے-

جھپٹنا، پلٹنا، پلٹ کر جھپٹنا
لہُو گرم رکھنے کا ہے اک بہانہ
یہ پورب، یہ پچھم چکوروں کی دنیا
مِرا نیلگوں آسماں بیکران

دشمن کا ایک طیارہ SU-30 جس کو ونگ کمانڈر فہیم نے ھٹ کیا تھا چوٹ کھا کر بھاگا اور گھومتا چکراتا پوٹے کے بل لائن آف کنٹرول کے پار جاکر زمین بوس ہوا جبکہ دوسرا طیارہ مگ 21 جس کو ابھینندن چلا رہا تھا اس پر حسن نے ایسا تاک کر نشانہ مارا کہ اس کو بھاگنے کی بھی مہلت نہ ملی اور وہ پر کٹے کوے کی طرح پھڑپھڑاتا ہوا سیدھا سر کے بل آزاد کشمیر کے علاقے بھمبر میں نیچے آرہا- ابھینندن نے بمشکل ایجیکٹ کرکے اپنی جان بچائ اور بحفاظت پاکستانی علاقے میں اترنے میں کامیاب تو ہوا لیکن مشتعل عوام نے اسے لاتوں اور مکوں پر رکھ لیا- وہ تو شکر ہے کہ پاک آرمی کے نوجوان وہاں پہنچ گئے اور ابھینندن کو یقینی طور پر چیتھڑے ہونے سے بچا کر اپنے ساتھ لے گئے-
ادھر جب حسن صدیقی یہ کارنامہ سرانجام دے کر اپنے بیس پہنچے تو جیسے ہی ان کے طیارے نے رن وے پر اپنے وھیل چھوۓ پورا ائر بیس اللہ اکبر اور حسن صدیقی کے لئے تعریفی نعروں سے گونج اٹھا- یقینا” حسن صدیقی نے پوری قوم کا سر فخر سے بلند کردیا ہے- اس نوجوان نے دشمن کی چال اس ہی پر الٹ دی- کراچی والوں کو اپنے اس سپوت پر جتنا فخر ہو وہ کم ہے -

حسن صدیقی کا تعلق کراچی کے ایک اوسط گھرانے سے ہے- کہا جاتا ہے کہ تقسیم کے وقت ان کے والد انڈیا کے شہر پٹنہ سے ہجرت کرکے کراچی میں سکونت پذیر ہوئے- حسن صدیقی نے اپنا بچپن نارتھ کراچی سیکٹر 11-K کے ایک سوبیس گز کے گھر میں گزارا- حسن صدیقی نے میٹرک نارتھ کراچی سیکٹر 11-A میں واقع ایک پرائیویٹ اسکول عثمان پبلک اسکول سے 1999 میں کیا- انہوں نے کراچی میں ہی پاکستان ائیر فورس میں کمیشن حاصل کیا- تو بھائیو پاکستانی مہاجر سندھی بلوچی پنجابی یا پشتون نہیں ہوتا بلکہ صرف پاکستانی ہوتا ہے اور ضرورت پڑنے پر اس مادر وطن کے لئے کچھ بھی کر گزرنے کو تیار رہتا ہے-
کراچی کے نوجوانو! حسن صدیقی نے تمہارے لئے ایک ایسی اعلی مثال قائم کردی ہے تو بس اپنی روایات کے مطابق علم حاصل کرتے رہو اور زیادہ سے زیادہ پاک فوج میں کمیشن حاصل کرو-
دوسری طرف مودی جی سے بس یہی کہنا ہے

ایہہ پُتر ہٹاں تے نئیں وِکدے، کی لَبھنی ایں وچ بازار کُڑے
ایہہ دَین وے میرے داتا دی، نا ایویں ٹکراں مار کُڑے

دوستوں سے شیئر کریں

تبصرہ کریں