پاکستانی قوم کے کچھ کرنے کے کام

پاکستانی قوم کے کچھ کرنے کے کام

نجم درویش

پاکستانی قوم کے کام

کام

1۔ چائے صرف وقت پر پیئں اور پلایئں
2۔ مہمانوں کو سادہ پانی پلایئں اور خود بھی پیئں
3۔ سرسوں کا تیل دیسی گھی اور مکھن استعمال کریں مگر مقدار ایک تھائی کردیں
4۔ چینی کا استعمال کم سے کم کر لیں اور زیادہ سے زیادہ چینی ایکسپورٹ کریں ۔
5۔ بلاوجہ اور حد سے زیادہ میک اپ چھوڑ دیں ۔اللہ نے جو شکل دی ہے وہ خوبصورت ترین یے ۔
6۔ فیشن کے نام پر فضول پروڈکٹس ایمپورٹ کرنا بند کردیں ۔
7۔ چکیوں کا آٹا استعمال کرنا شروع کریں ۔
8۔جہاں ممکن ہو خود کچھ جانور اور مرغیاں خرگوش وغیرہ پالیں ۔
9۔ ھر شخص سال میں کم از کم دس درخت کاشت کرے ۔خواہ اپنے کھیتوں میں ہوں یا کسی اور کی مدد کرے ۔
10۔ کھیتوں کے کنارے جنگلی گلاب اور مختلف قسم کے بیری کے پودے لگائیں ۔

11۔ سیگریٹ اور نسوار وغیرہ کا استعمال اور تمباکو کی پیداوار فوری بند کردیں ۔
12۔ درختوں کی کٹائی صرف انتھائی ضرورت کے تِحت ہو ۔
13۔ کسی بھی کھیت کو بنجر نہ چھوڑیں اگر آپ خود نہیں کرسکتے تو گاوں کے کسے شخص کو حصے پر دے دیں ۔
14۔پیسے بینک میں نہ رکھیں ۔کوئی سا بھی کام شروع کردیں خود یا کسی کے ساتھ مل کر ۔
15۔ قریبی دوستوں اور جاننے والوں کو اگر کاروبار میں دشواری ہو تو پیسے دے کر ان کی مدد کریں اور ان کے کاروبار کو کامیاب بنائیں ۔
16۔ اپنے اردگرد پڑوسیوں کا خیال رکھیں اور ان کی ضروریات پوری کریں ۔
17۔ پہاڑوں میں درِخت لگا کر اور چھوٹے چھوٹے بند باندھ کر بارش کے پانی کے کھلے بھاو میں رکاوٹ پیدا کریں تاکہ زیر زمین پانی کی سطح برقرار رہے ۔
18۔ بیماریوں کا علاج اچھی خوارک اور جسمانی ورزش سے شروع کریں ۔ڈاکٹر صاحبان دوائی کے علاوہ یہی علاج تجویز کریں اور صرف ایمرجنسی میں ہی دوائی دیں ۔
19۔ چھوٹے بچوں کو چھوٹے چھوٹے گھریلو کاموں میں لگا دیں تاکہ وہ کام کے عادی ہوجائیں۔
20۔ جتنا ممکن ہو ھر گاوں کے لوگ اپنی حکومت خود چلائیں ہر معاملے کا خیال خود رکھیں ایک دوسرے کی مدد کریں ۔مرکز یا صوبے کی طرف ہر معاملے میں نہ دیکھیں ۔

21۔ مجرموں اور قانون شکن عناصر کا قلع قمع کرنے میں قانون نافذ کرنے والے اداروں کا بھرپور ساتھ دیں ۔اور ایسے عناصر کے پشتیبانوں کا مکمل بائیکاٹ کردیں ۔
22۔ مجرم خواہ کتنا قریبی رشتہ دار یا دوست ہو اس کی مدد اور ساتھ دینے سے گریز کریں ۔اللہ کے لیے انصاف پر کھڑے ھو جائیں ۔
23۔مغرب کے نماز کے بعد سارے کاروبار بند کردیں اور صبح آٹھ بجے سے پہلے شروع کریں ۔
24۔گھر کے لیے صرف اتنی چیزیں اور کپڑے وغیرہ خریدیں جس کی واقعی ضرورت ہو ۔
25۔ گھروں میں یو پی ایس کا استعمال بند کردیں ۔
26۔ کم از کم جمعے کے دن لازمی غسل کریں اور صاف کپڑے پہنیں ۔
27۔ کپڑوں کو استری صرف سوٹس وغیرہ پر کریں یا عید وغیرہ کے لیے ۔عام دنوں میں ہر دفعہ کپڑے استری نہیں کریں اس طرح بے انتہا بجلی بچائی جاسکتی ہے ۔
28۔ ایر کنڈئشن کا سیٹنگ26 ڈگری پر رکھیں ۔
29۔ گرمی میں بغیر ایر کنڈیشنڈ کمروں میں اوپری روشن دان کا کچھ حصہ کھلا رکھیں تاکہ گرم ہوا باہر نکلے اور ٹھنڈی ہوا دروازوں اور کھڑکیوں کے راستے اندر اسکے ۔
30۔ پرندوں کے لیے پانی کا بندوبست کریں اور بچوں کو ان کے چھیڑنے یا مارنے سے سختی سے منع کریں

دوستوں سے شیئر کریں

تبصرہ کریں