بے روزگاری کا خاتمہ کیسے ممکن ہے ؟

بے روزگاری کا خاتمہ کیسے ممکن ہے ؟

تحریر : محمد نعمان بخاری

نعمان بخاری

بے روزگاری کا خاتمہ

دیکھا گیا ہے کہ اپنی ذات سے بیروزگاری کو مائنس کرنے کیلئے ہم کوئی بھی چھوٹا موٹا کام کرنے سے ہچکچاتے ہیں۔۔ ہم چاہتے ہیں کہ بیٹھے بٹھائے کچھ ایسی کرامت ہو جائے کہ ہم امیر ہو جائیں۔۔ دراصل یہ ہماری انا کے خلاف ہوتا ہے کہ ہم چھوٹا کام کریں اور یہ انا بننے کی وجہ "لوگ" ہوتے ہیں۔۔ لوگ کیا کہیں گے؟

تو سوال یہ ہے کہ جن لوگوں میں اپنا جھوٹا وقار اور خودساختہ بھرم قائم رکھنے کے لیے ہم ہاتھ کی کمائی کھانے سے شرماتے ہیں، کیا وہ لوگ ہماری تنگدستی میں ہمارا سہارا بن سکتے ہیں؟
اگر نہیں ۔۔ اور یقیناً نہیں، تو ایسوں کے طعنوں کی وجہ سے آپ کیوں اپنے حال اور مستقبل کے دشمن بنے ہیں؟ لوگوں کی پروا چھوڑئیے، ابھی اٹھئے اور آپکے پاس جتنے بھی پیسے موجود ہیں، چاہے سیکنڑوں میں ہیں، کوئی منصوبہ بنائیے اور ایک ہفتے میں اس رقم کو دُگنا کیجئے۔۔

یہ بالکل ممکن ہے۔۔ اگر آپ سمجھتے ہیں کہ ایسا ہونا غیرممکن ہے تو پھر ان "لوگوں" سے کچھ دن کے لیے قرض لیکر کچھ کیجئے جنکی وجہ سے آپکی ناک کٹنے کا اندیشہ ہے۔۔ اگر یہ بھی ممکن نہ لگے تو بسلسہ روزگار ہجرت کرکے ایسی جگہ چلے جائیے جہاں آپکا کوئی رشتہ دار اور واقف کار نہ بستا ہو۔۔!!
.

دوستوں سے شیئر کریں

تبصرہ کریں