روجھان جمالی 132 کے وی گرڈ اسٹیشن کا کام مکمل

روجھان جمالی 132 کے وی گرڈ اسٹیشن کا کام مکمل

رپورٹ و تجزیہ : دھنی بخش مگسی

کیسکو کے ذمہ دار زرائع نے بتایا ہے کہ روجھان جمالی میں گریڈ اسٹیشن کی اپ گریڈیشن کا کام مکمل کر کے روجھان جمالی 132گرڈ اسٹیشن کو اوچ پاور پلانٹ سے منسلک کر دیا گیا ہے جبکہ اوچ پاور پلانٹ میں میٹرز بھی نصب کر دئے گئے ہیں آج میں نے اپنے دوستوں کے ہمراہ گرڈ اسٹیشن کا دورہ بھی کیا کیسکو ترجمان کے مطابق 66 کے وی سے روجھان جمالی گرڈ اسٹیشن کو 132پر منتقل کرنے کیلئے تمام فیڈرز کے کیبل بھی تبدیل کر دئے گئے ہیں ٹیسٹنگ ٹیم کو روجھان جمالی سے ڈیرہ اللہ یار کے درمیان گیارہ ہزار کے ٹاورز کی ٹیسٹنگ کا کام ستر فیصد مکمل کر لیا گیا ہے باقی تیس فیصد پر کام کل گیارہ بجے تک مکمل کر کے دن بارہ بجے تک انشا اللہ روجھان جمالی 132سے پانچ فیڈرز کو آزمائشی برقی سپلائی کا بٹن آن کیا جائے گا۔

امید کی جا رہی ہے کہ ٹیسٹنگ کامیابی سےہم کنار ہو گی جس کے بعد باقائدہ طور پر بجلی کی سپلائی کا آغاز کر دیا جائے گا انہوں نے اس موقع پر روجھان جمالی گرڈ سے منسلک تمام فیڈرز کے صارفین کو مبارکباد دی اور کہا کہ ؤاپڈا کی ٹیموں کی کامیابی کیلئے سحری کے وقت عوام سے خصوصی دعاوں کی درخواست ہے تاکہ تیس برسوں تک بجلی کے عزاب بگھتنے والے عوام کو بجلی کی بہتر سروسز فراہم ہو سکیں۔

معزز بھائیو میں نے کل اپنے پوسٹ میں کیسکو کے پی آر او کی جانب سے یہ دعویٰ کیا تھا کہ آج یعنی پانچ جون کو بجلی کی سپلائی بحال ہو گی تاہم کچھ ٹیکینکل وجوہات کی بنا پر آج بجلی کی ٹیسٹنگ یقینی نہیں ہو سکی میری ہمیشہ یہ کوشش رہی ہے کہ اپنے فالورز کو بروقت حقائق سے آگاہ رکھوں اس ضمن میں آپ بھائیوں نے ہمیشہ میری حوصلہ افزائی کی اور مجھے سب سے زیادہ لائیک کمنٹس اور شیئرز دئے ہیں جس پر میں آپ سب کا مشکور ہوں۔

روجھان جمالی 66کے وی کے گرڈ کو آنے والے دنوں میں متبادل گریڈ کے طور پر استعمال میں لایا جا ئے گا خدانخواستہ کبھی 132میں کوئی فالٹ آ جائے تو پرانے گرڈ سے بجلی کی سپلائی جاری رکھی جا سکتی ہے ماضی میں جب بھی روجھان جمالی گرڈ میں فنی خرابی پیدا ہوئی تو ہمیں شہداد کوٹ اوستہ محمد جھل مگسی سے متبادل لائن کے زرئعے بجلی سپلائی کی جاتی تھی تاہم اب ایسا نہیں ہو گا ہم بجلی کے معاملے میں خود کفیل ہونگے کل انشا اللہ روجھان حفیظ آباد کشمیر کوٹ سمیت ڈیرہ اللہ یار کے دو فیڈرز جعفر اور سٹی کو مکمل وولٹیج کے ساتھ بجلی فراہمی کا باقائدہ آغاز کر دیا جائے گا۔

واپڈا کے اعلیٰ حکام سے میری تفصیلی بات چیت ہوئی میں نے انہیں شہر میں بڑھتے ہوئے بجلی کے بحران کے باعث عوام کی مشکلات سے بھی آگاہ کیا انہوں نے یہ بھی یقین دہانی کرائی کہ ہم کوشش کریں گے کہ ڈیرہ اللہ یار میں بجلی کی کھپت اور بڑھتی ہوئی آبادی کو مدنظر رکھتے ہوئے جعفر اور سٹی کے ساتھ مزید ایک اور فیڈر کا اضافہ کیا جائے گا تاکہ لوڈ کو برقرار رکھا جا سکے۔

اس مقصد کیلئے شہر کو تین حصوں میں تقسیم کرنے کا پلان بنا یا جائے گا جس میں شہری علاقوں کو جعفر اور سٹی سے بجلی کی سپلائی جاری رکھی جائے گی جبکہ انڈسٹرئیل اور کمرشل لائنوں کیلئے الگ فیڈر قائم کیا جائے گا تاہم ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ ایسا ہرگز نہیں ہو گا کہ کمرشل اور انڈسٹرئیل علاقوں کو بجلی چوبیس گھنٹے فراہم کی جائے گی اور گھریلو صارفین کو لوڈ شیڈنگ کا سامنا کرنا پڑے گا ہم اس سلسلے میں میکینزم بنا رہے ہیں اور یہ تب ہی ممکن ہو گا جب واپڈا حکام شہر کے منتخب عوامی نمائندوں تاجروں شہری اتحاد صحافیوں اور سول سوسائٹی کے نمائندوں سے تفصیلی مشاورت کو یقینی نہیں بناتی تاکہ ہر قسم کے خدشات کا خاتمہ ہو سکے۔

کل دن بارہ بجے تک امید کی جا رہی ہے کہ نئے گرڈ سے ڈیرہ اللہ یار سمیت پانچ فیڈروں کو بجلی کی ٹیسٹنگ کے بعد انشا اللہ مکمل بجلی فراہم ہو گی میرے کئی فالوورز نے مجھ سے یہ بھی پوچھا ہے کہ بجلی لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ کیا ہو گا تو اس سلسلے میں کیسکو کے مقامی آفیسران اور گرڈ اسٹیشن کے انچارج کے ساتھ شہری اتحاد کی کئی میٹنگز ہوئی ہیں انہوں نے باور کرایا ہے کہ شہر کو سولہ گھنٹے بجلی فراہم ہو گی اب دیکھنا یہ ہے کہ واپڈا اپنے دعوے میں کہاں تک صحیح ہے میری دعا ہے کہ کل نئے گرڈ اسٹیشن سے بلا تعطل بجلی کی فراہمی کا آغاز ہو تاکہ شدید گرمی کے مارے عوام کو تھوڑا سکھ نصیب ہو ۔

میں کیسکو کے ان ملازمین آفیسران مزدوروں اور گرڈ اسٹیشن کے ملازمین کو بہت بہت مبارک باد پیش کرتا ہوں جنہوں نے اس بہت بڑے اور عوامی منصوبے کی کامیابی کیلئے شب و روز محنت کی

دعاوں کا طلبگار دھنی بخش مگسی ) جعفرآباد بلوچستان (

دوستوں سے شیئر کریں

تبصرہ کریں