یہ خطرناک ایپلیکشنز کبھی بھی انسٹال نہ کریں

یہ ایپلیکیشن ہرگز استعمال نہ کریں

پچھلے تین دن سے ایک بندہ میسج کر رہا تھا کہ آپ کو فری انٹرنیٹ استعمال کرنے کے لیے ایک سافٹ ویئر دینا چاہتا ہوں ، میں نے کوئی جواب نہیں دیا لیکن جب اصرار حد سے بڑھنے لگا تو میں نے کہا بھیج دو بھائی۔

اب اس نے ایک سافٹ ویئر کا لنک بھیجا ہے جسے دوسروں کی ذاتی معلومات چوری کرنے کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔

 

مجھے تو انٹرنیٹ کی دنیا کی خاک چھانتے ہوئے عرصہ ہوگیا ہے میرے اس طرح کے عناصر کو پہچاننا کوئی مشکل کام نہیں آج سوچا اس حوالے سے تمام دوستوں کو آگاہ کروں تاکہ آپ اس طرح کے لوگوں سے احتیاط کریں۔

 

دراصل اس طرح کے سافٹ ویئر مثبت کاموں کے لیے بنائے جاتے ہیں لیکن ہمارے ہاں ان کا غلط استعمال کیا جاتا ہے۔ ان ایپلیکیشنز کی مدد سے لوگ اپنے فیملی ممبرز , بچوں اور ملازموں پر نظر رکھتے ہیں تا کہ اگر وہ انٹرنیٹ پر کوئی غلط کام کریں تو ان کو بر وقت روکا جا سکے۔

 

مزے کی بات یہ ہے کہ یہ ایپلیکیشنز انسٹال کرنے کے بعد موبائل میں نظر ہی نہیں آتے اس لیے اکثر ممالک میں والدین اس طرح ایپلیکشن اپنے بچوں کے موبائل میں انسٹال کرتے ہیں اور اپنے بچے کے موبائل کا سکرین اپنے موبائل پر دیکھتے ہیں تا کہ بچے کی مکمل نگرانی ہو سکے اور وہ غلط سرگرمیوں میں ملوث نہ ہو۔

 

ان ایپلیکیشنز کی مدد سے دوسروں کے موبائل فون کا سکرین لائیو دیکھنے کے ساتھ ساتھ کال اور ایس ایم ہسٹری دیکھی جا سکتی ہے۔

 

اندازہ کریں اگر آپ کے موبائل کا سکرین دوسرے موبائل پر بھی نظر آ رہا ہے تو آپ کا ای میل اور فیس بک اکاؤنٹ پاسورڈ کتنا محفوظ ہے۔

 

ان سافٹ ویئر کو spy ایپلیکیشنزکہا جاتا ہے۔ اگر کسی ایپلیکشن میں Spy لکھا ہوگا تو اس میں لاگ ان نہ کریں۔

 

ذیل میں دس spy سافٹ ویئرز کا نام دیا گیا ہے۔ اگر کسی نے آپ کو اس طرح کی ایپلیکیشن انسٹال کروائی ہے تو اسی وقت ڈلیٹ کریں۔

 

  • XNSPY
  • Spyzie
  • Flexispy
  • MobiStealth
  • Mobile Spy
  • SpyEra
  • Highster Mobile
  • PhoneSheriff
  • TheTruthSpy
  • iSpyoo

 

 

اس پوسٹ کو شیئر یا کاپی کریں۔ شکریہ

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

دوستوں سے شیئر کریں

تبصرہ کریں