فیس بک پیج مفت میں بوسٹ کریں۔

فیس بک پیج مفت میں بوسٹ کریں۔

اب آپ فیس بک پہ اپنا پیج مفت میں بوسٹ کر سکتے ہیں کیونکہ فیس بک ہر پیج کے لیے تیس ڈالر کا مفت کوپن دیتا ہے۔

فیس بک بوسٹ کیا ہے ؟

فیس بک پر آپ نے دیکھا ہوگا کہ آپ کے پیج کے ہر پوسٹ کے سامنے بوسٹ پیج لکھا ہوتا ہے دراصل بوسٹ کرنے سے فیس بک آپ کی پوسٹ یا پیج کو پھیلاتا ہے۔ بوسٹ کرنے کے لیے آپ کے پاس کریڈٹ کارڈ یا پے پال اکاؤنٹ ہونا لازمی ہے۔

 یہ بھی پڑھیں ویب سائٹ بنانے کا طریقہ مفت ہوسٹنگ کے ساتھ
بوسٹ پر کلک کر کے آپ اپنا مطلوبہ لوکیشن اور بجٹ منتخب کر سکتے ہیں یعنی کہ آپ اپنے پوسٹ کو کس ملک یا شہر میں پھیلانا یعنی مشہور کرنا چاہتے ہیں اور آپ جتنے روپے خرچ کریں گے اتنے زیادہ لوگ آپ کی پوسٹ کو دیکھ سکیں گے۔ جن لوگوں نے آپ کا پیج لائک نہیں بھی کیا ان کو بھی نظر آئے گا اور بوسٹ والے پوسٹ کے سامنے sponsored لکھا ہوتا ہے۔
یاد رہے بوسٹ کرنے پر فیس بک اس بات کا ضامن نہیں ہوتا کہ آپ کے پیج کو کتنے لائک کمنٹ یا شیئر ملیں گے ۔ فیس بک صرف دکھانے یعنی reach کے پیسے لیتا ہے لائک اور کمنٹس آپ کی پوسٹ پر منحصر ہوتے ہیں۔ مثال کے طور پر فیس بک پندرہ سو روپے میں آپ کی پوسٹ پانچ ہزار لوگوں کو دکھائے گا اب ان پانچ ہزار میں سے کتنے لوگ کمنٹ یا لائک کریں گے وہ آپ کی پوسٹ پر منحصر ہوتا ہے۔

مفت بوسٹ کوپن کیسے حاصل کریں۔

فیس بک پر مفت بوسٹ کوپن حاصل کرنے کے لیے آپ سب سے پہلے اپنے پیج پہ آ کر کسی پوسٹ کے بوسٹ آپشن پر کلک کریں۔بوسٹ پہ کلک کرنے کے بعد آپ وہاں دیکھ سکیں گے کہ فیس بک آپ کو تیس ڈالر کا مفت کریڈٹ دے رہا ہے۔ اگر آپ کو تیس ڈالر کا آپشن نظر نہ آئے تو بوسٹ کو کینسل کر دیں۔ کچھ ہی گھنٹوں میں فیس بک آپ کو نوٹیفکیشن دے گا کہ آپ نے اپنا پوسٹ بوسٹ نہیں کیا اپنا بوسٹ مکمل کریں۔ اس کے بعد آپ دوبارہ پیج پر آ کر کسی پوسٹ کو بوسٹ کریں اب آپ کو تیس ڈالر کا آپشن نظر آئے جو کہ اس طرح کا ہوتا ہے۔

اب آپ اپنے مطلوبہ سیٹنگز لوکیشن ، بجٹ وغیرہ منتخب کریں یاد رہے تیس ڈالر سے زیادہ کا بجٹ منتخب نہ کریں ورنہ آپ کے کریڈٹ کارڈ سے پیسے کٹ سکتے ہیں۔ اس کے بعد آ گے جائیں گے تو وہاں پیمنٹ کے آپشنز ہوں گے۔ جس میں کریڈٹ کارڈ اور پے پال کا آپشن ہوگا ۔ پے پال اکاؤنٹ پاکستان میں نہیں بنتا لہذا آپ کریڈٹ کارڈ کا آپشن استعمال کریں جو کہ پاکستان میں کسی بھی بینک سے آپ حاصل کر سکتے ہیں۔ یاد رہے اے ٹی ایم کارڈ ویزا ڈیبٹ کارڈ اور ماسٹر کارڈ میں فرق ہوتا ہے اس لیے بینک سے کارڈ لیتے وقت کنفرم کر لیں کہ آپ کا کارڈ آن لائن پیمنٹس کے لیے قابل قبول ہے یا نہیں۔ فیس بک پر ماسٹر کارڈ ویزا کارڈ دونوں استعمال کر سکتے ہیں۔ اگر آپ بینک اکاؤنٹ نہیں بنا سکتے تو جیز کیش کا ویزا ڈیبٹ کارڈ استعمال کریں جو کسی بھی جیز کیش شاپ سے تین سو یا پانچ سو روپے میں مل جاتا ہے۔ ویزا کارڈ کا نمبر اور پن کوڈ وغیرہ لگانے کے بعد فیس بک آپ سے پوچھے گا کہ آپ اپنے کارڈ سے کتنے روپے بوسٹ کے لیے وقف کرنا چاہتے ہیں تو آپ وہاں زیرو لکھیں یا خالی چھوڑ دیں اور Finish Boost پر کلک کریں۔ اب آپ کے کریڈٹ کارڈ سے کوئی کٹوتی نہیں ہوگی اور آپ فیس بک کی طرف سے دیئے گئے تیس ڈالرز سے مفت میں اپنا پیج بوسٹ کریں گے۔یاد رہے یہ تیس ڈالر صرف فیس بک بوسٹ کے لیے استعمال ہوسکتے ہیں۔اور جب تک آپ اپنا ڈیبٹ کارڈ نمبر نہیں ڈالیں گے تب تک یہ تیس ڈالر استعمال نہیں کر پائیں گے۔ اس مفت کوپن کی آفر تیس دن ہوتی ہے اگر آپ نے تیس دن کے اندر یہ تیس ڈالر استعمال نہیں کیے تو یہ منسوخ ہوجائیں گے۔ اگر آپ کو تیس ڈالر نہیں ملے تو اپنا کرنسی امریکی ڈالر پہ سیٹ کر کے دیکھیں۔

اگر آپ یہ تحریر سمجھ نہ آئے تو ہمارے یوٹیوب چینل پر ویڈیو دیکھیں۔

دوستوں سے شیئر کریں

تبصرہ کریں