فیس بک انسٹنٹ آرٹیکلز اپروو کروانے کا طریقہ

How to Setup Facebook instant articles

فیس بک انسٹنٹ آرٹیکلز کیسے اپروو کریں

بلاگر پر فیس بک انسٹنٹ آرتیکلز اپروو کریں

فیس بک انسٹنٹ آرٹیکلز اپروو کرنے کا طریقہ

مجھے فیس بک انسٹنٹ آرٹیکلز سیٹ اپ اور اپروو کرنے کے حوالے سے کافی دوستوں کے میسج آتے ہیں۔
ورڈپریس پر پلگ ان موجود ہے اس لیے آسانی سے سیٹ اپ ہوجاتے ہیں لیکن بلاگسپاٹ پر ایک ایک آرٹیکل سیٹ اپ کر کے سبمٹ کرنا پڑتا ہے۔ سیٹ اپ کرنے کے لیے آپ کو تھوڑی بہت کوڈنگ کے بارے میں معلوم ہونا چاہیے۔اگر آپ ایچ  ٹی ایم ایل ایڈیٹ کر سکتے ہیں تو آپ کے لیے بہت ہی آسان ہے۔ فیس بک کے مطابق آپ کو انسٹنٹ آرٹیکلز کے لیے ایک مختلف آر ایس ایس فیڈ بنانا چاہیے۔  بلاگر کے موجودہ یعنی ڈیفالٹ آر ایس ایس فیڈ پر مجھے خود اپنے آرٹیکلز کو ہر دفعہ پبلش کرنے کے لیے پندرہ منٹ سیٹ اپ کرنا پڑتا ہے۔
میں اس حوالے سے ریسرچ کر رہا ہوں انشااللہ بہت جلد اس مسئلے کا حل نکالنے کی کوشش کروں گا۔گوگل پر بھی اس حوالے سے کوئی مواد دستیاب نہیں۔
اگر کسی دوست کو اس بارے میں معلومات ہیں تو ضرور شیئر کریں تاکہ ہم ایک دوسرے کی مدد کر سکیں۔

مسئلہ

بلاگر پر اپنے آرٹیکلز کو امپورٹ کرنے کے بعد آپ پروڈکشن آرٹیکلز میں اپنے تمام آرٹیکلز دیکھ سکتے ہیں۔ اگر آپ پہلی مرتبہ اپلائی کرتے ہیں تو فیس بک انسٹنٹ آرٹیکلز اپروو نہیں ہوتے اور وہاں لکھا ہوتا ہے کہ آرٹیکلز میں کچھ تصویریں اور تحریریں شامل کریں اور دوبارہ اپلائی کریں۔
آپ سوچتے ہوں گے کہ آرٹیکلز میں سب کچھ موجود ہے پھر ایسا کیوں ہو رہا ہے۔
تو جناب سب سے پہلے اپنے انڈرائڈ یا آئی فون سے فیس بک کا پیج منیجر ایپ ڈاؤن لوڈ کر کے دیکھیں کہ آپ کے آرٹیکلز نظر آ رہے ہیں یا خالی ہیں۔ اگر فیس بک پیجز منیجر میں آپ کے آرٹیکلز خالی نظر آ رہے ہیں یا صرف تصویریں نظر آ رہی ہیں یا تمام آرٹیکلز پر ایک ہی تصویر نظر آ رہا ہے تو سمجھ لیں کہ آرٹیکلز کو سیٹ اپ کرنا ضروری ہے۔ جو آرٹیکل سیٹ اپ نہیں ہوتے پروڈکشن آرٹیکلز میں ان کے نیچے آر ایس ایس فیڈ لکھا ہوتا ہے۔ پیجز منیجر میں ایک مکمل آرٹیکل میں تصویر ، لوگو ، مصنف کا نام ، آرٹیکل کا عنوان ، اور آخر میں کاپی رائٹ ، حوالہ اور اشتہارات کا نظر آنا ضروری ہے ۔ اگر نظر نہیں آ رہے تو آپ کو پروڈکشن آرٹیکل میں ان سب کے کوڈز ایچ ٹی ایم ایل میں لگانے  ہوں گے۔

مسئلے کا حل

سب سے پہلے فیس بک کے پروڈکشن آرٹیکلز میں جائیں۔ اس کے بعد کوئی آرٹیکل منتخب کر کے اسے ایڈٹ کریں۔ اگر آپ کے آرٹیکلز میں مصنف یعنی رائٹر کا نام نظر نہیں آتا تو آپ ہیڈر <header> کے آگے یہ کوڈ لگائیں۔
میں نے اپنا نام لکھا ہوا ہے آپ ایڈٹ کر کے اپنا یا مصنف کا نام لکھیں۔

<address>
<a>Raheem Baloch</a>
</address>

 دوسرے مرحلے میں آرٹیکل کی باری ہے۔اگر آرٹیکل نظر نہیں آ رہا تو آرٹیکل جہاں سے شروع ہو رہا ہے وہاں یہ پی کوڈ <p> لکھیں آرٹیکل عموما باڈی <body > یا ٹیبل <table > والے کوڈ کے بعد شروع ہوتے ہیں اور ہیڈر<header > سے پہلے ختم ہوتے ہیں۔ ہیڈر <header > سے پہلے یعنی آرٹیکل کے اختتام میں پی کوڈ بند کریں یعنی </p> کوڈ لگائیں۔ اگر آرٹیکل میں تصویر یا کور فوٹو نظر نہیں آ رہا تو فیگر کوڈ کاپی کر کے ہیڈر میں پیسٹ کر دیں۔آرٹیکل کے اندر اوپر کی طرف ایک اس طرح کا کوڈ ہوتا ہے جو اس آرٹیکل کو کور فوٹو یا تھمبنل ہوتا ہے اس میں اس فوٹو کا لنک بھی موجود ہوتا ہے۔ جیسا کہ یہاں دیا گیا ہے۔

<figure><img border="0" data-original-height="297" data-original-width="477" height="398" src="https://1.bp.blogspot.com/-I2pJP6ErHWg/WjYxe_QmYHI/AAAAAAAAAC>Y/1MvlHXaZQX8bPrbrX1XL03Xghg0QdmcOACLcBGAs/s640/IMG_20171217_133802_067.jpg" width="640"></figure>

اسے کاپی کر کے ہیڈر کے آگے لگائیں۔
 یہ تو امیج کا کوڈ تھا اب اگر آپ اس تصویر کو کوئی نام دینا چاہتے ہیں تو یہ کیپشن کوڈ بھی فگر کے اندر یعنی جہاں سے امیج کا لنک ختم ہو رہا ہے وہاں ڈال دیں۔

<figcaption>
<h1>تصویر کا کیپشن</h1>
</figcaption>

تصویر کے بعد فوٹر<footer > میں آئیں فوٹر میں کاپی رائٹ کا کوڈ ڈال دیں جیسا کہ میں نے اس کوڈ میں لکھا ہوا ہے۔

<small>جملہ حقوق بنام اردو زمین محفوظ ہیں</small>

اس کے بعد فوٹر میں کریڈٹ لنک بھی دیں یعنی جس ویب سائٹ سے یہ آرٹیکل فیس بک پہ ڈالا جا رہا ہے اس کا لنک بھی شکریہ کے ساتھ دیں۔ جیسے

<aside>
<p> شکریہ  <a rel="urduzameen" href="https://www.urduzameen.com">اردو زمین</a>ِِِِِِ</p>
</aside>

اس کے بعد سب سے نیچے ہیڈ <head > کے کوڈ لگائیں۔ ہیڈ <head >اور ہیڈر <header > میں فرق ہوتا ہے۔ ہیڈ میں اشتہارات کا کوڈ لگا دیں۔ اگر آپ اشتہارات کا الگ کوڈ آڈینس نیٹ ورک سے لگانا چاہتے ہیں تو وہ کوڈ پیسٹ کر دیں۔ نہیں تو آپ آٹومیٹک اشتہارات کا یہ کوڈ لگا دیں اس کوڈ سے آٹو میٹکلی اشتہارات نظر آئیں گے۔

<meta property="fb:use_automatic_ad_placement" content="enable=true ad_density=default">

اشتہارات کے کوڈ  کے  بعد اسی جگہ پہ اپنے فیس بک تھیم یا ٹیمپلیٹ یعنی جو ڈیزائن آپ استعمال کر رہے ہیں اس کا کوڈ داخل کریں۔ اگر آپ ڈیفالٹ تھیم استعمال کر رہے ہیں تو یہ کوڈ لگا دیں۔

<meta property="fb:use_automatic_ad_placement" content="enable=true ad_density=default">

یہ تمام کوڈز لگانے کے بعد پیج منیجر میں دیکھیں کہ آرٹیکلز صحیح نظر آ رہے ہیں تو دوبارہ اپلائی کریں۔
اگر ری سبمٹ Resubmit  کا بٹن کام نہیں کر رہا تو اپنے بلاگ پر تین مزید آرٹیکلز لکھیں ان کو بھی اسی طرح سیٹ اپ کریں۔

ایچ ٹی ایم ایل Html کوڈ ایڈیٹ کرتے وقت اگر سرخ وارننگ آتا ہے سمجھ لیں کہ آپ نے کہیں پر غلط کوڈ لگا لیا ہے۔ اس کوڈ کو تلاش کریں۔ اگر پیلے رنگ کا وارننگ آ رہا ہے تو کوئی بات نہیں آٹو میٹک اشتہارات کی وجہ سے ہے۔ کبھی کبھار آرٹیکل میں زیادہ فاصلے یعنی بریکس ہونے کی وجہ سے پیلا وارننگ آتا ہے اس کو ختم کرنے کے لیے آرٹیکل میں تمام <br> والے کوڈ نکال دیں اور جہاں سے نیا پیرا گراف شروع ہوتا ہے وہاں <p> لگا دیں۔

میرے خیال سے میں نے تمام مسائل کا احاطہ کر لیا ہے اس کے باوجود اگر کوئی نقطہ رہ گیا ہو تو کمنٹ میں ضرور بتائیں۔

اس بلاگ کو فالو کرنا مت بھولیں
شکریہ

جواب دیجئے